Alcatel Pixi   Price Data

Alcatel Pixi   Price Data

Alcatel Pixi   Price Data

Tomato & Potato History ٹماٹر آلو:

Tomato Potatoes:

 

The thirteenth to fifteenth centuries AD were the days of Aztec civilization in Central America (the part between the continents of North and South America, present-day Mexico). In their settlement, this red fruit was produced which was not found anywhere else in the world at that time. They used it in their cooking and called it Tomato in their language. When the European nations found out about the American continents, they came here with guns for the purpose of occupation and formed their own small colonies. Following him, the Spaniards also arrived, who not only took the Aztec's hostage, but also seized the red fruit. Because their language was Spanish, they named the fruit Tomate. From here they delivered the fruit to Europe. When it fell into the hands of the British, they started calling it Tomato. During the occupation of the subcontinent, the British brought these gifts to Pakistan and India. People here started calling it Tomato Tomato. Since then, its name has been Tomato. Tomato in Aztec means ripe fruit.

 


















It is actually a plant that flowers. And this flower later becomes a fruit. In fact, depending on the nature of its use, it is considered a fruit or a vegetable. The matter is so serious that in 1893 a buyer took the case to the US Supreme Court, since the government had imposed a new tax on vegetables at that time, the buyer claimed that tomato is not a vegetable but a fruit, so the tax on it should be reduced. In the end, it was decided that since it is cooked in a salty pot instead of a sweet dish, it is a vegetable. However, science still calls it a fruit because of its various characteristics. What are the benefits of this fruit? let's see.

 

* Tomatoes contain about 95% water, as well as a large amount of potassium, which acts as a natural electrolyte. Thus, tomatoes are good for dehydration and dehydration.

 

* It is low in calories, low in carbohydrates, and low in fat, and has adequate fiber. All of these things make it a digestible food and a weight loss fruit.

 

* There is a special, color-forming substance inside the tomato called Lycopene, which makes the tomato red. This red color of tomato is called Caretonoid. Lycopene is actually a very powerful anti-oxidant.

 

An antioxidant is something that not only lowers cholesterol by opening blood vessels, strengthens the heart, beautifies hair, nails, and skin, but also improves eyesight. Simply put, tomatoes sharpen the eyes and cleanse the blood. The redder the tomato, the higher the antioxidant content.

 

* Tomatoes also contain plenty of vitamin C, which improves immunity.

 

* It is also good for diabetics.

 

Belonging to the NightShade family of tomato plants

 

Keeps Interestingly, potatoes also belong to the same family. Not only this, but also capsicum, green chillies and eggplant. In fact, the Night Shade family is a very toxic family. Its innumerable plants are full of poison. Toxins are also found in tomato and potato leaves. The tomato plant contains a toxic chemical called tomatine, which can be harmful if ingested in large quantities. It is also a work of nature to extract ripe fruit from all these poisonous plants without poisoning. The poison inside the plants is actually to protect them. Keep animals and children away from tomato plants. Green tomatoes also contain this poison. Avoid eating green tomatoes.

 

How to grow:

 

* Tomatoes can be grown both by seed and by grafting.

* Seeds can also be germinated by lightly wetting them in a paper towel and by separating them directly into the soil. The plant begins to emerge in one to two weeks.

* Use suitable soil and fertilizer for the plant. Keep the water ratio right, do not overflow and keep the plant in a shady place in the sun.x

* Will begin to bear fruit in two months. Writing yields less fruit. The small hairs that appear on the tomato are actually the roots that will start to grow as soon as the soil gets mixed.

۰ Its mini plant can also be planted in water. But the fruit will not be so strong.

Potatoes, Potao:

 

Aloe vera is actually from the same family, so its plant also contains a toxic chemical, solanine. Except for potatoes, the rest of the plant is harmful. If you want to keep potatoes, keep them in a cool and light place. This is because it often starts to turn green when cooked, which is a dangerous sign that it should not be eaten anymore.  

 

Potato is also a vegetable of North and South America. And it was first discovered in Peru, a special country in South America. When the Spanish occupation group reached there, seeing its benefits, they brought it to Europe and from there they reached India, Pakistan and Asia. With the help of laboratory experiments, about 5,000 varieties of potatoes have been discovered so far, of which only a few are widely grown. China is the number one champion in the production of both tomatoes and potatoes, followed by India and the United States. Potatoes grow under the ground in the form of a thick stem-like root called a tuber. What are the benefits of this Tuber? Let's see

 

* Tomatoes are from the family, so many things are similar. It contains about 80% water and contains large amounts of potassium and vitamin B6 which relieves body heat and dehydration.

 

* It contains vitamin C. And strengthens the immune system.

 

* It contains vitamin K which thickens the blood which helps in wound healing.

* Potatoes contain fiber which is good for digestion. It has more fiber in the skin so it should be cooked with the skin.

* Potatoes contain easily digestible carbohydrates that will provide the body with instant energy. Therefore, potato is the fastest digestible light food for a sick person. However, this feature is not good for diabetics, so experts forbid high blood sugar patients.

 

* Potatoes themselves do not thicken if eaten boiled, but if made in oily things such as french fries, will make the body fat

How to grow:

* Cut large potatoes into three or four pieces or take small potatoes. Place the eye part upwards and apply it to the appropriate soil to an inch depth.

* Give the plant adequate water and keep the soil moist but do not allow water to accumulate. Make sure there are holes in the bottom of the pot. Potatoes will be safer in larger pots or containers. Planted directly in the garden, other terrestrial animals also come to eat it.

* Apply it in early April and two months later the potatoes are ready.

Tomatoes are a healthier food than potatoes. And both are good for health. If tomatoes are expensive, plant them yourself at home in shoppers, in plastic containers, and also save healthy hobbies. 



 

 

ٹماٹر آلو:

Tomato & Potato

تیرھویں سے پندھرویں صدی عیسوی کا دور ہے جب سینٹرل امریکہ ( براعظم شمالی و جنوبی امریکہ کے درمیان کا حصہ موجودہ میکسیکو) میں Aztec تہذیب کے لوگ بستے تھے۔ ان کی بستی میں یہ سرخ رنگ کا پھل پیدا ہوتا تھا جو دنیا میں اس وقت اور کہیں بھی نہیں تھا۔ یہ لوگ اسے اپنے کھانے بنانے میں استعمال کرتے اور اسکو اپنی زبان میں Tomatl (تومتل) کہتے تھے۔ جب یورپی قوموں کو امریکی براعظموں کے بارے میں پتہ چلا تو وہ گن توپیں لے کر یہاں قبضے کی غرض سے پہنچ گئے اور اپنی چھوٹی چھوٹی کالونیاں بنائیں۔ ان کی پیروی کرتے ہوئے اسپین کے لوگ بھی یہاں پہنچے جنہوں نے نہ صرف Aztec لوگوں کو یرغمال بنا لیا بلکہ ساتھ ہی ساتھ اس سرخ پھل کو بھی ہتھیا لیا۔ چونکہ انکی زبان Spanish تھی اسلئیے انہوں نے اس پھل کو Tomate کا نام دیا۔ یہاں سے انہوں نے یہ پھل یورپ پہنچایا۔ جب انگریزوں کے ہاتھ چڑھا تو وہ اسے Tomato کہنے لگے۔ برصغیر پر قبضے کے وقت انگریز یہ سوغات یہاں پاکستان انڈیا میں لے آئے۔ یہاں کے لوگ اسے ٹماٹر ٹماٹر کہنے لگے ۔ تب سے یہاں اس کا نام ٹماٹر ہی ہے۔ ٹماٹر کا Aztec زبان میں مطلب ہے سوجھا ہوا پھل۔

یہ اصل میں ایک پودا ہے جس پہ پھول لگتے ہیں۔اور یہی پھول بعد میں پھل بنتا ہے۔ اصل میں اسکے استعمال کی نوعیت کے حساب سے اسے پھل یا سبزی مانا جاتا ہے اگر ویسے کھائیں تو پھل اور پکا کر کھائیں تو سبزی۔ یہ معاملہ اتنا سنگین ہے کہ 1893 میں امریکی سپریم کورٹ میں ایک خریدار کیس لے گیا، چونکہ اس وقت حکومت نے سبزیوں پہ نیا ٹیکس عائد کیا تھا تو خریدار کا دعویٰ تھا ٹماٹر سبزی نہیں پھل ہے لہذا اس پہ ٹیکس کم کیا جائے۔ آخر میں فیصلہ یہ طے پایا کہ چونکہ یہ میٹھی ڈش کی بجائے نمکین ہانڈی میں پکتا ہے اس لئیے یہ سبزی ہے۔ تاہم سائنس ابھی بھی اسے مختلف خصوصیات کی وجہ سے پھل کہتی ہے۔ اس پھل کے کیا کیا فائدے ہیں؟ دیکھتے ہیں۔

ٹماٹر میں تقریباً %95 پانی ہوتا ہے اسکے ساتھ ساتھ پوٹشیم کافی بڑی مقدار میں موجود ہے جو قدرتی الیکٹرولائیٹ کا کام کرتا ہے۔ اس طرح ٹماٹر پانی کی کمی اور ڈی ہائی ڈریشن سے بچنے کے لئیے اچھا ہے۔

۰ اس میں کیلوریز کم، کاربوہائیڈریٹ کم اور Fat کم ہیں ساتھ میں مناسب فائیبر موجود ہے۔ یہ سب باتیں اسے زود ہضم غذا اور وزن کم کرنے والا پھل بناتی ہیں۔

۰ ٹماٹر کے اندر ایک خاص, رنگ بنانے والی چیز ہے جسےLycopene کہتے ہیں یہی ٹماٹر کا سرخ رنگ بناتا ہے۔ ٹماٹر کا یہ سرخ رنگ Caretonoid کہلاتا ہے۔ Lycopene دراصل انتہائی طاقتور Anti-oxidant ہے ۔

اینٹی آکسیڈنٹ وہ شے ہے جو نہ صرف خون کی نالیاں کھول کر کولیسٹرول کم کرتا، دل مضبوط کرتا، بال، ناخن اور جلد خوبصورت کرتا ہے بلکہ Lycopene تو نظر کو بھی بہتر بناتا ہے۔ سیدھے لفظوں میں ٹماٹر آنکھیں تیز کرتا خون صاف کرتا ہے۔ ٹماٹر جتنا سرخ ہوگا اس میں Anti oxidant اتنا ہی زیادہ ہوگا.

۰ٹماٹر میں وٹامن سی بھی کافی مقدار میں موجود ہے جو قوت مدافعت کو بہتر کرتا ہے۔

۰ یہ شوگر کے مریضوں کے لئیے بھی اچھا ہے۔

ٹماٹر پودوں کے NightShade خاندان سے تعلق

رکھتا ہے۔ مزے کی بات، آلو بھی اسی خاندان سے تعلق رکھتا ہے۔ نہ صرف یہ بلکہ شملہ مرچ، سبز مرچ اور بینگن بھی۔ دراصل night Shade خاندان بہت ہی زہریلا(toxic) خاندان ہے۔ اسکے بیشمار پودے زہر سے بھرپور ہیں۔ ٹماٹر اور آلو کے پتے تنا وغیرہ میں بھی زہر پایا جاتا ہے۔ ٹماٹر کے پودے میں ایک زہریلا کمیکیل Tomatine موجود ہوتا ہے جو اگر بڑی مقدار میں جسم میں چلا جائے تو نقصان پہنچا سکتا ہے۔ اس سارے زہر کے پودے میں سے پکے ہوئے پھل کو بغیر زہریلا باہر نکالنا بھی قدرت کی کاریگری ہے۔ پودوں کے اندر زہر دراصل انکی حفاظت کے لئیے ہے۔ جانوروں اور بچوں کو ٹماٹر کے پودے سے دور رکھیں۔ سبز ٹماٹر میں بھی یہ زہر موجود ہوتا ہے سبز ٹماٹر کھانے سے گریز کریں۔

اگانے کا طریقہ:

۰ٹماٹر کو بیج اور قلمکاری دونوں طریقوں سے اگایا جاسکتا ہے۔

۰ بیج کو پیپر ٹاول میں ہلکا گیلا کرکے بھی Germinate (بیج سے پودا نکالنا) کیا جاسکتا ہے اور سیدھا مٹی میں بھی الگ الگ کرکے ۔ ایک سے دو ہفتوں میں پودا نکلنا شروع ہوجاتا ہے۔

۰ پودا کے لئیے مناسب مٹی اور فرٹیلائزر کا استعمال کریں۔ پانی کا تناسب ٹھیک رکھیں Overflow نہ ہونے دیں اور پودے کو دھوپ میں سایہ دار جگہ پر رکھیں۔

دو مہینوں میں پھل دینا شروع کردے گا۔ قلمکاری سے پھل کم ملتا ہے۔ ٹماٹر پہ چھوٹے چھوٹے جو بال نظر آتے ہیں وہ بھی دراصل جڑیں ہی ہیں جو مٹی ملتے ساتھ ہی اگنا شروع کردیں گی۔

۰ اسکا Mini Plant بھی پانی میں لگایا جاسکتا ہے۔ لیکن پھل اتنا مضبوط نہیں بنے گا۔

آلو , Potao:

آ لو بھی دراصل اسی خاندان سے ہے تو اس کے پودے میں بھی ایک زہریلا کیمیکل Solnine موجود ہے۔ سوائے آلو کے باقی سارا پودا نقصان دہ ہے۔ آلو کو رکھنا ہو تو ٹھنڈی اور بغیر روشنی والی جگہ پر رکھیں۔ کیونکہ یہ اکثر پک کر سبز ہونا شروع ہوجاتا ہے جو کہ خطرے کی نشانی ہے کہ اسے اب مت کھایا جائے۔

آلو بھی براعظم شمالی و جنوبی امریکہ کی سبزی ہے۔ اور جنوبی امریکہ کے خاص ملک پیرو میں اسے پہلی بار دریافت کیا گیا۔ جب اسپین کا قبضہ گروپ وہاں پہنچا تو اسکے فوائد دیکھ کر یورپ لے آیا اور وہیں سے یہ انڈیا، پاکستان اور ایشیا پہنچے۔ لیبارٹری کے تجربات کی مدد سے اب تک آلووں کی کوئی پانچ ہزار اقسام دریافت ہوچکی ہیں جن میں سے بڑے پیمانے پر چند ایک ہی کاشت کی جاتی ہیں۔ ٹماٹر اور آلو، دونوں کی پیداوار کا نمبر ون چیمپئین چین ہے اسکے بعد بھارت اور امریکہ ترکی وغیرہ کا نمبر آتا ہے۔ آلو زمین کے نیچے ایک موٹا تنا نما جڑ کی شکل میں پیدا ہوتا ہے جسے Tuberکہتے ہیں۔ اس Tuber کے کیا کیا فائدے ہیں؟ آئیے دیکھتے ہیں۔

۰ ٹماٹر فیملی سے ہے تو بہت ساری باتیں ملتی جلتی ہیں۔ اس میں تقریباً %80 پانی ہوتا ہے اور بڑی مقدار میں پوٹاشئیم اور وٹامن B6 موجود ہیں جو جسم کی گرمی اور پانی کی کمی دور کرتے ہیں۔

۰ اس میں وٹامن سی موجود ہے جو قوت مدافعت مضبوط کرتا ہے۔

۰ اس میں وٹامن K موجود ہے جو خون کو گاڑھا کرتا ہے جس سے زخموں کو جلد بھرنے میں مدد ملتی ہے۔

۰ آلو میں فائیبر موجود ہے جو ہاضمے کے لئیے اچھا ہے۔ اس کا زیادہ فائیبر چھلکے میں ہوتا ہے اسلئیے اسے چھلکے سمیت پکانا چاہئیے۔

۰آلو میں جلد ہضم ہونے والے کاربوہائیڈریٹ ہیں جو جسم کو فٹافٹ انرجی پہنچائیں گے۔ اسلئیے بیمار بندے کے لئیے آلو ایک تیز ترین ہضم ہونے والی ہلکی خوراک ہے۔ تاہم اسکی یہ خصوصیت شوگر کے مریضوں کے لئیے اچھی نہیں اسلئیے ماہرین ہائی بلڈشوگر کے مریضوں کو اس سے منع کرتے ہیں۔

۰ آلو بذات خود ابال کر کھایا جائے تو موٹا نہیں کرتا لیکن تیل والی چیزوں میں بنایا جائے جیسے فرینچ فرائز، تو جسم کو موٹا کرے گا۔

اگانے کا طریقہ:

۰ بڑے آلو تین چار ٹکڑوں میں کاٹ لیں یا چھوٹے آلو لیں۔ آنکھ والا حصہ اوپر کی طرف رکھ کر مناسب مٹی میں ایک انچ گہرائی تک لگا ڈالیں۔

پودے کو مناسب پانی دیتے رہیں اور مٹی کو نم رکھیں لیکن پانی جمع نہ ہونے دیں۔ اطمینان کرلیں کہ گملے کے نیچےسوراخ موجود ہیں۔ آلو بڑے گملے یا کیاری میں زیادہ محفوظ رہیں گے۔ سیدھا باغیچے میں لگانے سے دوسرے زمینی جانور بھی اسے کھانے آجاتے ہیں۔

۰ اسے اپریل کے شروع میں لگائیں اور دو مہینوں بعد آلو تیار۔

ٹماٹر آلو کی نسبت زیادہ صحت بخش غذا ہے۔ اور دونوں کا ہی استعمال صحت کے لئیے اچھا ہے۔ ٹماٹر مہنگے ہوں تو خود گھر میں شاپروں، پلاسٹک کے کنٹینرز میں لگائیں صحت بخش مشغلہ بھی اور بچت کریں۔

 


Post a Comment

Previous Post Next Post